مضامین

سوشل میڈیا کا جادو۔۔۔ توجہ طلب معاملات

سوشل میڈیا کا جادو۔۔۔ توجہ طلب معاملات

گئے زمانے کی بات ہے کہ لوگ آپس میں مل جل کر رہتے تھے اور ہر دکھ سکھ میں بے لوث ایک دوسرے کا ساتھ دیتے تھے۔ ہر گاوں میں ایک چوپال ہوتی تھی جہاں روزانہ شام کو لوگ بیٹھتے تھے۔ ایک دوسرے سے دکھ سکھ کی باتیں کرتے اور ایک دوسرے کا حوصلہ بڑھاتے تھے۔چوپال میں کبھی تو حالات حاضرہ پر تبصرے ہوتے اور کبھی قصے کہانیوں سے دل بہلایا جاتا۔

Essays

To Hear the Voice of Your Heart

To Hear the Voice of Your Heart

Your conscience is like a little voice inside of you that tells you when you are right and when you are wrong. In this world, only some people can hear this voice. Those people who can hear this voice always go on the right path and make the right decisions in life and you will see in the world you carry in your heart. A heart is a small piece of our body.

شاعری

Poetry

Guest Corner

مہنگائی کم کیوں نہیں ہوتی؟

مہنگائی کم کیوں نہیں ہوتی؟

مہنگائی مہنگائی مہنگائی یہ کم کیوں نہیں ہوتی۔ ؟کیوں۔۔۔۔۔ کیونکہ دنیا کا کوئی بھی ملک مہنگائی کم نہیں کر سکتا۔ یہ دنیا ایک گلوبل ویلج بن چکی ہے تو ایسے میں ٹیکس اصلاحات کے ذریعے چیزوں کو مہنگا تو کیا جا سکتا ہے لیکن کوئی بھی چیز ایک خاص حد سے نیچے نہیں آ سکتی۔ پاکستان سمیت تمام غریب ممالک اپنی پوری توانائی چیزوں کو سستا کرنے میں لگا دیتے ہیں لیکن پھر بھی مہنگائی کم نہیں ہوتی۔

Book Reviews

Taaruf-e-Islam

Taaruf-e-Islam

آج کی اس جدید دنیا میں مذہب کی اہمیت سے انکار ممکن نہیں۔ تمام تر جدت کے باوجود دنیا کے سیاسی، معاشی اور معاشرتی معاملات میں جو تبدیلیاں وقوع پذیر ہو رہی ہیں ان کا ایک محرک مذہب بھی ہے۔ کسی مذہب کے اس جدید دنیا میں کردار پر بحث سے پہلے اس کا مکمل تعارف درکار ہوتا ہے جو کہ کسی ایک کتاب میں جامع طور پر پیش کرنا ایک کٹھن کام ہے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ اسلام ایک مکمل ضابطہ حیات ہے جو زندگی کے تمام پہلو

افسانے

حِرص۔۔۔

حِرص۔۔۔

”اماں یہ مرچکا ہے تم اس کو اب لے کر آرہی ہو"۔" نہ ڈاکٹر صاحبہ! ایہہ ساہ گھِندا پیا اے۔ تُساں ایکوں ڈیکھو تاں سہی"۔

Short Stories

Courage Begets Courage

Courage Begets Courage

It was the last time the boy could gaze at the fainted crescent that dwelled in the mystic and bizarre light of the night sky. Surrounded by his beloved ones, he could feel the immenseness of agony that accumulated somewhere in the hollowness of his mind.  “Disfavouring of fate, undoubtedly, that was it”, the boy thought to himself.